Chitral Times

18th August 2017

ﺗﻔﺼﻴﻼﺕ

چترال انتظامیہ حالات کو خراب کرنے سے باز رہے، عمائدین کریم آباد

July 30, 2017 at 6:31 pm

چترال (چترال ٹائمز رپورٹ ) کریم آباد چترال کے عمائدین نے ضلعی انتظامیہ اور پولیس کی کارکردگی پر حیرت اور افسوس کا اظہار کرتے ہوئے کہا ہے کہ بااثر شخص کی ایما ء پر علاقے کے عمائدین کو بے جرم و خطا گرفتار کرناکہاں کا انصاف ہے۔ میڈیا سے گفت گو میں ولی زار خان، عبدالحکیم، نور ولی، امجد خان اور کریم اللہ نے کہا کہ چند سال قبل تباہ کن سیلاب کی وجہ سے لوگوں نے اتفاق رائے سے بکریاں نہ پالنے کا تحریری معاہدہ کیا تھا۔ متاثرین نے اپنی مدد آپ کے تحت تباہ ہونے والے پل ،سڑکیں اور اپنے مکانات ہی نہیں۔ بلکہ والیان شوغور کے تباہ شدہ قلعے کو بھی بحال کیاتھا۔ اب شہزادہ حیدرالملک نے معاہدہ توڑتے ہوئے تین سو سے زیادہ بکریاں چراگاہ میں چھوڑ دیں۔جس سے تین یونین کونسلوں کی تباہی کا خطرہ پیدا ہوگیا۔مذاکرات ناکام ہونے پر تین یونین کونسلوں ہرت، برشگرام اور سوسوم کے عمائدین نے بکریاں پولیس کے حوالے کردیں۔ ڈاکٹر حیدر الملک کے دباو پر پولیس نے علاقے کے 24عمائدین پر سنگین الزامات کے تحت مقدمات درج کرکے انہیں جیل میں بند کردیا۔ انہوں نے کہا کہ انتظامیہ دانستہ طور پر حالات خراب کرنے سے باز رہے۔اور گرفتار عمائدین کو فوری طور پر رہا کیا جائے۔بصورت دیگر علاقے کے ہزاروں افراد انتظامیہ کے خلاف دھرنا دینے پر مجبور ہوں گے۔

Translate »
error: Content is protected !!