Chitral Times

22nd August 2017

ﺗﻔﺼﻴﻼﺕ

چترال ٹاون کے عوام کی غیر اعلانیہ اور ناروا لوڈشیڈنگ کے خلاف گزشتہ رات واپڈا دفتر کے سامنے احتجاجی مظاہرہ

May 27, 2017 at 11:51 pm

چترال ( نمائندہ چترال ٹائمز ) چترال ٹاون میں بجلی کی ناروا وغیر اعلانیہ لوڈشیڈنگ اور آنکھ مچولی کے خلاف ہفتہ کے رات ٹاون کے عوام نے واپڈ دفتر کے سامنے زبردست احتجاجی مظاہرہ کیا۔ مظاہرین نے چترال مستوج روڈ ، پشاور اور گرم چشمہ روڈ گھنٹوں تک بلاک کئے رکھا ۔ جس کی وجہ سے مریضو ں کے ساتھ عام راہگیروں کو بھی انتہائی مشکلات کا سامنا کرنا پڑا۔

چیو پل چوک پر احتجاجی مظاہرین سے خطاب کرتے ہوئے پاکستان مسلم لیگ (ن ) چترال سب ڈویژن کے صدر اور پاور کمیٹی کے نائب صدر کوثر ایڈوکیٹ اور جاوید ایڈوکیٹ و دیگر نے خطاب کرتے ہوئے کہا کہ ضلعی انتظامیہ اورواپڈ حکام نے انھیں 26تاریخ تک کا ڈیڈ لائن دیتے ہوئے وعدہ کئے تھے کہ 26مئی تک ہر صورت میں چترال ٹاون کو بجلی دی جائیگی مگر 36گھنٹے گزرنے کے باوجود بھی اپنے وعدے پر عملد رآمد کرنے سے قاصر ہیں۔ لہذا عوام مجبور ہوکر سڑکوں پر نکلی ہے ۔ مظاہرین نے واپڈ اور انتظامیہ کے خلاف زبردست نعرہ بازی کی ۔ اس موقع پر تحصیل نائب ناظم اور پاور کمیٹی کے صدر خان حیات اللہ خان پہنچ کر مظاہرین سے کامیاب مذاکرات کی ۔ جس پر مظاہرین پر امن طو ر پر منتشر ہوئے ۔ خان حیات اللہ خان نے مظاہرین کو یقین دہانی کرائی کہ کل یعنی 28مئی کو دس بجے ڈسٹرکٹ کونسل ہال میں ایک اہم جلاس بلایا جائیگا۔ جس میں تمام اسٹیک ہولڈر اور لائن ڈیپارٹمنٹ کے حکام بھی شرکت کریں گے اور عوام کو اصل حقیقت سے اگاہ کرنے کے ساتھ اس بات کی بھی یقین دہانی کرائیں گے کہ رمضان المبارک کے دوران بجلی کی ناروا لوڈشیڈنگ سے عوام کو نجات دلایا جائیگا۔ بصورت دیگر عوام اپنی آئندہ کا لائحہ عمل خود طے کریگی۔

Translate »
error: Content is protected !!